انڈو نیشین بارہ سال موٹا ترین بچہ چلنے لگا   


کو شائع کی گئی۔ February 2, 2018    ·(TOTAL VIEWS 58)      No Comments

رپورٹ۔۔۔۔ زکیر احمد بھٹی
انڈونیشیا میں دنیا کے موٹے ترین بچّے کے طور پر پہچانا جانے والا 12 سالہ آریا برمانا آخر کار اپنے پاؤں پر چلنے کے قابل ہو گیا۔ اس کا وزن 195 کلو گرام ہے۔ دو برس قبل دس سال کی عمر میں برمانا کا وزن 121 کلو گرام کے قریب تھا۔ وہ خود سے چلنے اور نارمل انداز سے زندگی گزارنے پر قدرت نہیں رکھتا تھا۔غذائی ماہرین کی مدد اور معدے کے آپریشن کے ذریعے بڑی حد تک وزن کم کرنے کے بعد برمانا بہت سے کام کرنے کے قابل ہو گیا ہے۔ وہ اب اسکول جانے اور ٹینس بال کھیلنے کی قدرت رکھتا ہے۔ برمانا کی ماں رقيہ سومانتری (37 سالہ) اور باپ آدی سومانتری (47 سالہ) اپنے بیٹے کی زندگی میں آنے والی اس مثبت تبدیلی پر بے حد مسرور ہیں۔ برمانا کا گزشتہ اپریل میں ایک آپریشن ہوا جس نے اس کی حالت بہتر بنانے میں مدد کی۔ مستقبل میں اس کا ایک اور آپریشن متوقع ہے۔ آپریشن کے بعد اب یہ بچّہ پہلے کی طرح بہت زیادہ نہیں کھا سکتا۔ اسی طرح اسے غذا میں شکر اور کاربوہائیڈریٹس لینے کی اجازت نہیں ہے۔ آریانا برمانا کی پیدائش نارمل وزن کے ساتھ ہوئی تھی تاہم وقت کے ساتھ اس کا وزن غیر معمولی طور پر بڑھنے لگا۔ اس کی خوارک کا نظام والدین کے لیے تشویش کا باعث بن گیا۔ برمانا روزانہ پانچ وقت کھانا کھاتا ہے اور اس کی مقدار دو بالغ افراد کی خوراک کے برابر ہے۔انڈونیشی بچّے کے ساتھ مسئلہ یہ تھا کہ وہ کھانے اور سونے کے سوا کوئی سرگرمی انجام نہیں دیتا تھا۔ چلنے سے قاصر ہو جانے پر برمانا نے اسکول جانا بھی چھوڑ دیا تھا تاہم اب وہ پھر سے اپنے اسکول لوٹ گیا ہے۔

Readers Comments (0)




WordPress Blog

WordPress Blog