بلوچستان: بارشوں کے باعث ندی نالوں میں طغیانی، بچوں سمیت 8 افراد جاں بحق   


کو شائع کی گئی۔ August 9, 2020    ·(TOTAL VIEWS 32)      No Comments

کوئٹہ (یواین پی)بلوچستان کے مختلف علاقوں میں شدید بارشوں کے بعد ندی نالوں میں طغیانی آگئی، جن سے صوبے کے21 اضلاع متاثرہوئے ہیں۔ جعفر آباد، ڈیرہ بگٹی اور خضدار میں بچوں سمیت 8 افراد جاں بحق ہو گئے ہیں۔ پسنی کے قریب کوسٹل ہائی وے کا پل بہہ گیا۔تفصیلات کے مطابق بلوچستان میں طوفانی بارش اور سیلاب سے تباہی آ گئی، ندی نالوں میں شدید طغیانی کے باعث جعفر آباد، ڈیرہ بگٹی اور خضدار میں دو بچوں سمیت چھ افراد جاں بحق ہو گئے، پسنی کے قریب کوسٹل ہائی وے کا پل بہہ گیا، قلات، لسبیلا،آواران اور پنجگور میں بھی ہر طرف پانی ہی پانی نظر آ رہا ہے،حب کے قریب ریلے میں پھنسے سات سیاحوں کو نکال لیا گیا۔دوسری طرف سیلابی پانی سے بی بی نانی پل میں شگاف پڑ گیا، کوئٹہ کا سندھ پنجاب سے زمینی رابطہ منقطع ہو گیا، برساتی ریلے سے بی بی نانی کے مقام پر پل مین شگاف پڑ گیا، شگاف پڑنے سے پل کاایک حصہ مکمل تباہ ہو گیا، سندھ پنجاب کی کوئٹہ کیلئے شاہراہ ہرقسم کی ٹریفک کے لیے بند کر دی گئی۔ ڈیرہ بگٹی میں مختلف علاقوں میں 4 سے 5 فٹ پانی لوگوں کے گھروں میں داخل ہوگیا۔انتظامیہ نے لوگوں کو محفوظ مقامات پر منتقل کردیا۔ ڈیرہ بگٹی میں سیلابی ریلے میں سانپ نے ایک شخص کو کاٹ لیا جسے ڈسٹرکٹ ہسپتال منتقل کردیا گیا۔سیلابی ریلے میں لوگوں کا سامان اور کھانے پینے کی اشیاء بہہ کر تباہ ہوگئی۔خضدار کے علاقے مولا میں سیر کےلئے جانےو الے 100 افراد کو بحفاظت نکال لیاگیاہے۔ بولان میں بی بی نانی کے پل اورکوسٹل ہائی وے پرروڈ کو نقصان پہنچاہے۔درہ بولان میں اونچے درجےکا سیلاب ہے اور کرتہ کےعلاقےمیں کچھ لوگ پھنسےہوئےہیں۔جن کو نکالنےکرنے کےلئے امدادی کاروائیاں جاری ہے۔

Readers Comments (0)




Weboy

Premium WordPress Themes