بلوچستان میں نئی حکومت سازی کے لیے جوڑ توڑ کا سلسلہ جاری   


کو شائع کی گئی۔ January 11, 2018    ·(TOTAL VIEWS 62)      No Comments

کوئٹہ(یو این پی) بلوچستان کے سابق وزیر اعلی نواب ثنا اللہ زہری کے استعفیٰ کے بعد نئی حکومت سازی کے لیے جوڑ توڑ کا سلسلہ جاری میر عبدالقدوس بزنجو، سرفراز بگٹی، میر خالد خان لانگو، سردار صالح بھوتانی ،میر عاصم کرد گیلو اور جان جمالی نئے وزیر اعلیٰ کی دوڑ میں شامل ہیں تاہم اس بات کا امکان اس وقت ہو گا جب لیگی منحرف اراکین اور متحدہ اپوزیشن جماعتیں اس حوالے سے لائحہ عمل طے کریں ذرائع کے مطابق بلوچستان میں سابق وزیر اعلیٰ نواب ثناء اللہ زہری کے استعفیٰ کے بعد نئی حکومت سازی کے لئے جوڑ توڑ کا سلسلہ شروع ہو گیا تاہم متحدہ اپوزیشن جماعتوں نے وزیر اعلیٰ کے امیدوار نہ لانے اور حکومت کا حصہ بننے سے انکار کر دیا تا ہم نئے حکومت کے حوالے سے لیگی اراکین کے ساتھ مکمل تعاون کی یقین دہانی کرا دی تاہم نئے قائد ایوان کے دوڑ میں سابق ڈپٹی اسپیکر میر عبدالقدوس بزنجو، سابق وزیر داخلہ میر سرفراز بگٹی، سابق مشیر میر خالد خان لانگو، سردار صالح بھوتانی اور جان جمالی شامل ہے۔ سابق وزیر اعلی کے خلاف تحریک عدم اعتماد کے روح رواں اور مسلم لیگ(ق) کے رہنما میر بزنجو کا کہنا تھا کہ حکومت سازی کا معاملہ آئندہ تین چار روز تک طے کیا جائے گا تاہم ذرائع کا کہنا ہے کہ نئے قائد ایوان کے لئے حکومتی اراکین اور متحدہ اپوزیشن جماعتوں کے درمیان مشاورت اور رابطے جاری ہے۔

Readers Comments (0)




Weboy

Weboy