چینی سفارتخانے نے 90 پاکستانی دلہنوں کے ویزے روک لئے   


کو شائع کی گئی۔ May 15, 2019    ·(TOTAL VIEWS 40)      No Comments

اسلام آباد: (یواین پی) چین کے حکام کے مطابق ان کے شہریوں کی پاکستانی لڑکیوں سے شادیوں کی آڑ میں انسانی سمگلنگ کی شکایات کے بعد پاکستان میں چینی سفارتخانے نے 90 کے قریب نوبیاہتا پاکستانی ‘دلہنوں’ کے ویزے روک لیے۔چین کے ڈپٹی چیف آف مشن لی جیان زاؤ نے ایک انٹرویو میں کہا اس سال شادی ویزا کی درخواستوں میں اضافہ ہوا، گزشتہ سال 142 چینی باشندوں نے اپنی پاکستانی بیویوں کے لیے چینی سفارتخانے سے ویزے لیے تاہم اس سال چند ماہ میں ہی 140 کے قریب درخواستیں موصول ہونے پر چینی سفارتخانہ محتاط ہو گیا اور صرف 50 پاکستانی دلہنوں کو ویزے جاری کیے اور باقی 90 کے ویزے روک دئیے گئے۔انہوں نے کہا کہ چینی سفارتخانے نے اس کے ساتھ ہی پاکستانی حکام کو بھی الرٹ کر دیا جس کے بعد پاکستانی اداروں نے تحقیقات شروع کر دیں، گزشتہ سال کے تمام کیسز کی تفتیش چینی ادارے کر رہے ہیں اور تحقیقات میں زبردستی جسم فروشی اور اعضا کی فروخت کا کوئی ثبوت نہیں ملا، انٹرنیٹ اور میڈیا پر اس سلسلے میں جھوٹ بولا جا رہا ہے، اگر ایسا نہیں ہے تو آپ مجھے ثبوت دیں۔لی جیان زاؤ نے کہا کہ ایک سو بیالیس کیسز میں سے اِکّا دُکا واقعات میں تشدد یا ہراساں کیے جانے کی شکایات آئی ہیں، تمام چینی باشندے پاکستانی سفارتخانے سے ویزے لے کر یہاں آئے، پھر یونین کونسل کی جانب سے نکاح نامے لیے اور پھر رجسٹرار کے دفتر گئے۔ چوتھے مرحلے پر وہ وزارت خارجہ سے تصدیق کے لیے گئے۔ اس کے بعد چین کے سفارتخانے سے اپنے کاغذات کی تصدیق کروائی۔

Readers Comments (0)




Premium WordPress Themes

Weboy