عازمین حج کیلئے تمام انتظامات مکمل کر لئے گئے:ڈائریکٹر جنرل حج ڈاکٹر ساجد یوسفانی

Published on July 18, 2017 by    ·(TOTAL VIEWS 872)      No Comments

جدہ ( زکیر احمد بهٹی ) ڈائریکٹر جنرل حج ڈاکٹر ساجد یوسفانی نے کہا ہے کہ عازمین حج کیلئے تمام انتظامات مکمل کر لئے گئے ہیں۔ امسال پاکستانی عازمین کی مجموعی تعداد ایک لاکھ 79 ہزار 210 ہو گی ۔ سرکاری اسکیم کے تحت آنے والے عازمین ایک لاکھ 7 ہزار 526 جبکہ 71 ہزار 684 پرائیوٹ ٹور آپریٹرز کے تحت آنے والے عازمین کو دوران حج 3 وقت کا کھانا مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں فراہم کیا جائیگا۔ سابقہ تجربے کو مد نظر رکھتے ہوئے امسال عازیعے فریضہ حج ادا کریں گے ۔ ڈائریکٹر جنرل حج ڈاکٹر ساجد نے مزید کہا کہ سعودی وزارت حج کے قواعد کے مطابق امسال بھی حکومتی اسکیم کے تحت آنے والے عازمین کو دوران حج 3 وقت کا کھانا مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں فراہم کیا جائیگا ۔ سابقہ تجربے کو مد نظر رکھتے ہوئے امسال عازمین کو فراہم کی جانے والی کیٹرنگ سروس کے معیار کو مزید بہتر کیا گیا ہے ۔ کھانا فراہم کرنے والے اداروں کو خصوصی طور پر ہدایت کی گئی ہے کہ وہ پاکستانی شیف کا انتظام کریں تاکہ عازمین کو انکے ذوق کے مطابق کھانا فراہم کیا جاسکے ۔ مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں رہائش کے حوالے سے سوال پر ڈائریکٹر جنرل حج کا کہنا تھا کہ امسال مدینہ منورہ میں سرکاری حج اسکیم کے تحت آنے والے تمام عازمین کو مسجد نبو ی شریف سے ملحق عمارتوں (مرکزیہ ) میںٹھہرانے کا بندوبست کیا گیا ہے جبکہ مکہ مکرمہ میں العزیزیہ اور بطحا القریش میں عمارتیں حاصل کی گئی ہیں ۔ مکہ مکرمہ میں عازمین کی حرم شریف آمد ورفت کیلئے ٹرانسپورٹ کمپنی سے معاہدے کر لئے گئے ہیں ۔ ٹرانسپورٹ سہولت فراہم کرنے والے ادارے کو اس امر کا پابند بنایا گیا ہے کہ پاکستانی عازمین کیلئے جدید بسیں فراہم کی جائیں تاکہ انہیں کسی قسم کی دشواری کا سامنا نہ کرنا پڑے ۔ مکہ مکرمہ میں عازمین کو ٹرانسپورٹ کی سہولت 24 گھنٹے فراہم کی جائے گی جس کے لئے خصوصی عملے کی ذمہ داریاں بھی لگائی گئی ہیں جو اس امر کو ہر طرح سے یقینی بنائیں گے ۔ حکومت پاکستان کی جانب سے فریضہ حج کی ادائیگی کیلئے امسال ان افرادکو اولیت دی گئی ہے جنہو ںنے گزشتہ 7 برس کے دوران فریضہ ادانہیں کیا اس کا مقصد ان افراد کو سرکاری حج اسکیم سے مستفیض ہونے کا موقع فراہم کرنا ہے جو فریضہ حج ادا نہیں کرسکے یا کم از کم انہوں نے 7 برس قبل حج ادا کیا ہو۔ ڈاکٹر یوسفانی نے مزید کہا کہ سابقہ تجربات کی روشنی میں امسال جدہ حج ٹرمنل اور مدینہ منورہ ائیر پورٹ پر اس بات کا خصوصی انتظام کیا ہے کہ عازمین کو کسی قسم کی تاخیر کا سامنا نہ کرنا پڑے ۔ ائیر پورٹس پر عازمین کو سامان کی وجہ سے کافی تاخیر کا سامنا کرنا پڑتا تھا جس کیلئے امسال عازمین کے سامان کے حوالے سے مکتب الوکلاء کی ذمہ داری ہو گی تاکہ عازمین کو کسی قسم کی تاخیر کا سامنا نہ کرنا پڑے

Readers Comments (0)




Weboy

WordPress Blog