فیصل آباد: پسند سے زندگی گزارنے کا فیصلہ موت کا پروانہ بن گیا

Published on June 19, 2016 by    ·(TOTAL VIEWS 317)      No Comments

111
فیصل آباد (یو این پی) فیصل آباد میں پسند کی شادی کرنے والی لڑکی اور لڑکے کو اغوا کے بعد قتل کر دیا گیا۔ میاں بیوی کو سر میں گولیاں مار کر لاشوں کو نہر میں پھینک دیا۔ قتل کرنے والوں میں لڑکی کی والدہ، بھائی اور رشتہ دار شامل ہیں۔اقصیٰ اور شکیل رولر ہیلتھ میں ملازم تھے اور پانچ سال قبل پسند کی شادی کی تھی جس کے بعد دونوں علاقہ چھوڑ کر دوسرے گائوں میں چلے گئے تھے۔ کچھ روز قبل اقصی کے بھائی، والدہ اور رشتہ دار اس کے گھر آئے جہاں دونوں میاں بیوی کو تشدد کا نشانہ بناتے ہوئے اغواء کر کے نامعلوم مقام پر لے گئے جہاں ان کے سروں میں گولیوں مار کر نہر میں پھینک دیا گیا۔دونوں میاں بیوی کی لاشیں گوجرہ کے قریب نہر سے برآمد ہوئی ہیں۔ پولیس نے لاشوں کو قبضے میں لینے کے بعد کاروائی شروع کر دی ہے۔ تھانہ ٹھیکری والہ پولیس نے شکیل کے والد کی مدعیت میں لڑکی کی والدہ، دو بھائی اور خالو کے خلاف اغواء کا مقدمہ درج کر لیا ہے۔شکیل کے رشتہ داروں کے مطابق اقصیٰ حاملہ تھی اور دونوں میاں بیوی نے دھمکیاں ملنے پر 41 ج ب سے علاقہ چھوڑ کر 71 ج ب منقتل ہوئے تھے۔

Readers Comments (0)




WordPress主题

Premium WordPress Themes