تیسرا ٹی ٹوئنٹی، سپر اوور میں انگلینڈ کا پاکستان کو وائٹ واش

Published on December 1, 2015 by    ·(TOTAL VIEWS 419)      No Comments

777
شارجہ(یو این پی) انگلینڈ نے پاکستان کے سیریز کے آخری ٹی ٹوئنٹی میچ میں سپر اوور میں ایک گیند قبل چار رنز بنا کر سیریز میں وائٹ واش کر دیا۔ پاکستان کی جانب سے تین رنز کے ہدف کو بچانے کے لیے کپتان شاہد آفریدی نے اخری اوور کروایا اور آخری گیند میں رن آؤٹ کا موقع ضائع کر دیا اور انگلینڈ ٹیم میچ جیت کر سیریز میں وائٹ واش کا خواب سچا ثابت کر دیا۔ انگلینڈ کی جانب سے کپتان آئن مورگن اور جوزبٹلر نے سپر اوور میں بیٹنگ کی۔ جبکہ شاہد آفریدی اور عمر اکمل سپر اوور میں انگلینڈ کے فاسٹ باؤلر کرس جارڈن کے سامنے بے بس نظر آئے اور صرف تین رنز بنا سکے جبکہ عمر اکمل آخری گیند میں بولڈ ہو گئے۔ پاکستان اور انگلینڈ کے درمیان سیریز کا آخری ٹی ٹوئنٹی میچ انتہائی سنسنی خیز مرحلے میں داخل ہو گیا جب 155 رنز کے ہدف کے تعاقب میں سہیل تنویر نے آخری گیند میں ایک رن لے کر اسکور کو 154 تک پہنچا کر برابر کر دیا۔ انگلینڈ کے خلاف پاکستان کے ابتدائی بلے بازوں کے جلدی آؤٹ ہوئے جب احمد شہزاد 4، رفعت اللہ مہمند صفر اور محمد حفیظ ایک رن بنا کر آؤٹ ہو گئے۔ محمد رضوان نے پاکستان کے اسکور کو 50 رنز پہنچانے میں اہم کردار کیا انھوں نے 24 رنز بنا ئے تھے کہ عادل راشد نے اپنی ہی گیند پر شاندار کیچ کے ذریعے آؤٹ کر دیا۔ عمر اکمل چار رنز بنا کر معین علی کی وکٹ بن گئے۔ تاہم شعیب ملک اور کپتان شاہد آفریدی نے جارحانہ موڈ اپناتے 63 رنز کی شراکت میں ٹیم کو بہتر پوزیشن میں لا کھڑا کیا، شعیب ملک نے اپنی نصف سنچری بھی مکمل کر دی لیکن شاہد آفریدی 29 رنز بنا کر ڈیوڈ ولی کی گیند پر آؤٹ ہو گئے۔ شعیب ملک ایک گیند قبل 75 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئے، اس وقت پاکستان کو جیت کے لیے صرف دو رنز چاہیے تھے۔ آخری گیند میں سہیل تنویر نے ایک رن لے کر میچ کو سنسنی خیز بنا دیا اور میچ سپر اوور میں نتیجہ خیز ثابت ہو گا۔ اس سے قبل انگلینڈ نے پاکستان کو تیسرے اور آخری ٹی ٹوئنٹی میچ میں سیریز کی پہلی جیت کے لیے 155 رنز کا ہدف دے دیا۔ ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کرنے والی انگلش ٹیم کو اننگ کی پہلی ہی گیند پر اس وقت دھچکا لگا جب اپنا پہلا ٹی ٹوئنٹی میچ کھیلنے والے عامر یامین نے جیسن روئے کو ایل بی ڈبلیو کر دیا۔ وہ ٹی ٹوئنٹی کرکٹ میں ڈیبیو پر پہلی ہی گیند پر وکٹ لینے والے پہلے پاکستانی اور دنیا کے گیارہویں کھلاڑی ہیں۔ پہلی ہی گیند پر وکٹ گرنے کے باوجود انگلینڈ نے میچ میں شاندار واپسی کی اور جیمز ونس اور جو روٹ نے اس کے بعد شاندار بیٹنگ کرتے ہوئے اپنی ٹیم کا مجموعہ پانچ اوورز میں 46 رنز تک پہنچا دیا۔ تاہم گزشتہ میچ میں بہترین باؤلنگ کرنے والے شاہد آفریدی نے باؤلنگ پر آتے ہی یکے بعد دیگرے دو وکٹیں لے کر انگلش بیٹنگ کو گہری گزند پہنچائی۔ انھوں نے پہلے جو روٹ اور پھر معین علی کو اپنی ہی گیند پر کیچ لے کر ٹیم کو تیسری کامیابی دلائی۔ شعیب ملک کی بہترین باؤلنگ کے باعث آئن مورگن اپنی وکٹ نہیں بچا سکے انھوں نے 15 رنز بنائے. پانچویں وکٹ جوز بٹلر کی صورت میں گری جب محمد رضوان نے انھیں رن آؤٹ کیا۔ انور علی نے سیم بلنگز کو آؤٹ کر کے پاکستان کو چھٹی کامیابی دلا دی، وہ 7 رنز بنا سکے. کرس ووکس اور جیمز وینس نے ساتویں وکٹ میں 60 رنز بنا کر انگلینڈ کی ٹیم کو اچھی پوزیشن پر کھڑا کر دیا، 146 رنز پر ووکس 37 رنز بنا کر سہیل تنویر کی گیند پر عمر اکمل کو کیچ دے بیٹھے۔ سہیل تنویر کی پانچویں گیند پر عمر اکمل نے 46 رنز بنانے والے وینس کا شاندار کیچ کیا۔ انگلینڈ نے مقررہ 20 اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 154 رنز بنائے۔ پاکستان ٹیم کے کپتان شاہد آفریدی اور سہیل تنویر نے دو دو وکٹیں حاصل کیں۔ اس سے قبل پاکستان ٹیم کے کپتان شاہد آفریدی نے سیریز میں لگاتار تیسرا ٹاس ہار کر سیریز میں ٹاس ہارنے کی ہیٹ ٹرک مکمل کی۔ انگلینڈ نے ٹیسٹ سیریز میں ناکامی کے بعد آئن مورگن کی قیادت میں پہلے ون ڈے اور پھر ٹی ٹوئنٹی سیریز میں کامیابی حاصل کی۔ انگلینڈ نے دبئی میں کھیلے گئے پہلے ٹی ٹوئنٹی میچ میں 14 رنز جبکہ دوسرے میچ میں صرف 3 رنز سے کامیابی حاصل کر کے سیریز اپنے نام کی تھی۔

Readers Comments (0)




Premium WordPress Themes

Free WordPress Theme